Tuesday, August 9, 2022
پہلا صفحہ خبریں کراچی کے معروف کیپری سنیما میں فلم ’شینو گئی‘ کا خصوصی شو

کراچی کے معروف کیپری سنیما میں فلم ’شینو گئی‘ کا خصوصی شو

جمعہ 26 نومبر کو ریلیز ہونے والی پاکستانی اُردو فلم ’شینو گئی‘ کا خصوصی شو میڈیا انڈسٹری سے وابستہ دوستوں کے لیے کیپری سنیما کراچی میں رکھا گیا، جس میں انڈسٹری کی چیدہ چیدہ شخصیات نے شرکت کی۔

شینو گئی، ایک حساس موضوع پر بنائی گئی متوازی (پیرلل) سنیما کی فلم ہے جس کی کاسٹ میں ذیادہ تر نئے چہرے شامل ہیں۔ فلم کی کہانی ایک ایسی لڑکی کے گرد گھومتی ہے جو بائیک پر سفر کرتی ہے اور ماڈرن کپڑے پہنتی ہے۔ کراچی سے بلوچستان کے سفر کے دوران کنڈ ملیرمیں اس کی بائیک خراب ہوجاتی ہے، جس کے بعد اسے ایک گیسٹ ہاؤس میں رات گزارنے کے لیے رُکنا پڑجاتا ہے لیکن وہاں موجود تین ہوس ذدہ مرد اس کے ساتھ جنسی ذیادتی کرتے ہیں۔ اس حادثے کے بعد وہ کس طرح ان مردوں سے انتقام لیتی ہے، یہی شینو گئی، کی کہانی کا انجام ہے۔ فلم کے ڈائریکٹر ابو علیحہ، پروڈیوسر جاوید احمداور عابدہ احمد ہیں۔ شینو گئی، میٹرو لائیو موویز کے توسط سے سندھ اور پنجاب سرکٹ میں ریلیز کی گئی ہے جبکہ اسلام آباد اور راول پنڈی میں فیڈرل سینسر بورڈ کی جانب سے پابندی کے باعث مذکورہ شہروں میں فلم کی نمائش نہ کی جاسکی۔
کیپری سنیما پر شینو گئی، کے خصوصی شو پرعوام کا جم غفیر نظر آیا جنہوں نے فلم کی کاسٹ اور ٹیم کے ساتھ فلم کو انجوائے کیا۔ اس موقع پر کیپری سنیما کے مالک چوہدری فرخ، جنرل منیجر عزیز خٹک، ڈسٹری بیوشن کمپنی میٹرو لائیو موویز کے سی ای او عمر خطاب خان، فلم کے پروڈیوسر جاوید احمد، ڈائریکٹر ابو علیحہ، انڈین ایکٹر اجلال علی خان، لاہور سے آئے مہمان ڈائریکٹر جرار رضوی، اداکار اسد محمود، فلم کی ہیروئن مرینہ سید اور کاسٹ میں شامل دیگر اداکاروں نے آڈیئنس سے براہ راست اظہارِخیال کیا۔

اس موقع پر شرکا نے کہا کہ خواتین کے ساتھ ذیادتی کے واقعات میں تشویش ناک حد تک اضافہ ہوگیا ہے اور آئے دن میڈیا پر ایسے واقعات رپورٹ ہوتے ہیں لیکن حکومت کے کانوں پر جوں تک نہیں رینگتی۔ ایسے واقعات بھی بے شمار ہیں جو کہیں رپورٹ ہی نہیں ہوتے۔ المیہ یہ ہے کہ ایسے کیسز میں عام طور پر عورتوں کو ہی ذمے دار ٹھہرایا جاتا ہے۔ کبھی ان کے پہناوے پر تنقید کی جاتی ہے تو کبھی ان کے رہن سہن کو حدف تنقید بنایا جاتا ہے۔ کچھ لوگ اسے گھریلو تربیت سے جوڑنے کی کوشش کرتے ہیں لیکن عزت لوٹنے والے مرد کو کوئی کچھ نہیں کہتا۔ اس کے برعکس جب کوئی عورت اپنا مقدمہ لے کر عدالت میں جاتی ہے تو اس سے طرح طرح کے سوالات کیے جاتے ہیں۔ فلم کے ڈائریکٹر ابو علیحہ کا کہنا ہے کہ شینو گئی، ان سب عورتوں سے مختلف ہے، وہ اپنا بدلہ لینا جانتی ہے اور یہی اس فلم کا پیغام بھی ہے کہ عورتوں کو اپنی حفاظت خود کرنی ہے۔

فلم کے خصوصی شو کی ویڈیو کوریج

فلم دیکھنے کے لیے موجود میڈیا انڈسٹری سے وابستہ شخصیات اور صحافیوں نے اس بات پر حیرت کا اظہار کیا کہ آخر وفاقی سینسر بورڈ کو اس فلم میں ایسی کیا بات پسند نہیں آئی کہ انہوں نے شینو گئی، جیسی بامقصد فلم کو نمائش کے لیے غیر موزوں قرار دیا جس کی وجہ سے پروڈیوسرز کو بھاری مالی نقصان اٹھانا پڑا۔ اس سے عمل سے پاکستان میں پیرلل سنیما کی تحریک کو نقصان پہنچ رہا ہے اور پروڈیوسرز خوف ذدہ ہوکر ایسے موضوعات کو چھونے کی کوشش ہی نہیں کرتے جبکہ حکومت ٹی وی چینلزپر کروڑوں روپے کے اشتہارات چلاکر عورتوں کو تحفظ دینے اور ذیادتی کے کیسز میں آواز اٹھانے کی ترغیب دیتی ہے۔ یہ دہرا معیار عام آدمی کی سمجھ سے بالاتر ہے۔ کیپری سنیما کے سی ای او چوہدری فرخ نے شینو گئی، کے پروڈیوسرز اورڈائریکٹر ابو علیحہ کو خاص طور پر مبارک باد دی کہ انہوں نے اس سلگتے ہوئے موضوع پر فلم بنائی ۔ انہوں نے کہا کہ دنیا بھر کی طرح پاکستان میں بھی پیرلل سنیما کی حوصلہ افزائی ضروری ہے۔ ہم ہر طرح کی فلموں کا خیر مقدم کرتے ہیں۔

فلم کے خصوصی شو کی ویڈیو کوریج

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

متعلقہ پوسٹس

لاک ڈاؤن کے بعد سے بولی وڈ پر ناکامی کے بادل چھائے ہیں۔ فلم انڈسٹری دس ملین ڈالرز کا نقصان برداشت کرچکی ہے

کرونا سے پہلے بھی بولی وڈ انڈسٹری کی حالت کچھ ذیادہ اچھی نہیں تھی اور ہندوستان کے سب سے بڑے فلمی...

یاراوے، کی نمائش ایک بار پھر خطرے میں۔ مرینہ خان سمیت دیگر کے واجبات کی ادائیگی کا معاملہ عدالت پہنچ گیا

بھارتی ڈائریکٹر منیش پوار کی فلم ’یارا وے‘ 16 ستمبرکو پاکستان میں ریلیز کرنے کا اعلان کیا گیا ہے لیکن کئی...

باکس آفس رپورٹ: لندن نہیں جاؤں گا، 22 کروڑ 84 لاکھ اور قائد اعظم زندہ باد، 20 کروڑ 61 لاکھ کا بزنس

عید الاضحی پر ریلیز ہونے والی تینوں پاکستانی فلمیں چوتھے ہفتے میں داخل ہوچکی ہیں تاہم عید ریلیزز کا بزنس اب...
- Advertisment -

مقبول ترین

لاک ڈاؤن کے بعد سے بولی وڈ پر ناکامی کے بادل چھائے ہیں۔ فلم انڈسٹری دس ملین ڈالرز کا نقصان برداشت کرچکی ہے

کرونا سے پہلے بھی بولی وڈ انڈسٹری کی حالت کچھ ذیادہ اچھی نہیں تھی اور ہندوستان کے سب سے بڑے فلمی...

یاراوے، کی نمائش ایک بار پھر خطرے میں۔ مرینہ خان سمیت دیگر کے واجبات کی ادائیگی کا معاملہ عدالت پہنچ گیا

بھارتی ڈائریکٹر منیش پوار کی فلم ’یارا وے‘ 16 ستمبرکو پاکستان میں ریلیز کرنے کا اعلان کیا گیا ہے لیکن کئی...

باکس آفس رپورٹ: لندن نہیں جاؤں گا، 22 کروڑ 84 لاکھ اور قائد اعظم زندہ باد، 20 کروڑ 61 لاکھ کا بزنس

عید الاضحی پر ریلیز ہونے والی تینوں پاکستانی فلمیں چوتھے ہفتے میں داخل ہوچکی ہیں تاہم عید ریلیزز کا بزنس اب...

دودا، 2 ستمبر کو سنیما گھروں کی زینت بنے گی

دودا، پہلی بلوچی فلم ہے جو سنیما گھروں کی زینت بننے جارہی ہے۔ فلم کا اُردو ڈب ورژن بھی ریلیز کیا...

ریسینٹ کمنٹس